ہوواوے کو کام کرنے سے روکنے پر چین کی بھارت کو دھمکی

0
25

بھارت ملک میں فائیو جی ٹیکنالوجی کے لیے ہواوے کو نظر انداز کر رہا ہے۔ فوٹو : فائل

بھارت ملک میں فائیو جی ٹیکنالوجی کے لیے ہواوے کو نظر انداز کر رہا ہے۔ فوٹو : فائل

بیجنگ: چین نے بھارت کو سخت الفاظ میں متنبہ کیا ہے کہ چینی موبائل کمپنی ہواوے کے کام میں رکاوٹ ڈالنے سے باز رہے ورنہ چین میں بھارتی کمپنیوں کو کام کرنے نہیں دیا جائے گا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق چین نے بھارت کو موبائل کمپنی ہواوے کو کام کرنے سے روکنے پر متنبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر ہواوے کو بھارت میں کاروبار کرنے سے روکا گیا تو چین میں بھارتی کمپنیوں کو بند کردیا جائے گا اور اس کے اثرات دونوں ممالک کے درمیان معاشی معاہدوں پر بھی پڑیں گے۔

خبر رساں ادارے رائٹرز نے اپنے سفارتی ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ بھارت میں فائیو جی سیلولر نیٹ ورک شروع ہونے والی ہے جس کے لیے بھارت نے کئی مقامی و غیر مقامی کمپنیوں کو پلیٹ فارم مہیا کیا ہے تاہم ابھی تک بھارت نے چینی ٹیلی کام کمپنی ہواوے کو نہ صرف مدعو نہیں کیا بلکہ ہواوے کی پیشکش کا جواب بھی نہیں دیا جا رہا ہے۔

واضح رہے کہ موبائل اور انٹرنیٹ کی ہائی فریکوئنسی اور تیز ترین رفتار رکھنے والی ’فائیو جی‘ ٹیکنالوجی کو دنیا بھر میں سب سے پہلے استعمال کرنے والا ملک جنوبی کوریا ہے اور اب بھارت بھی اس ٹیکنالوجی کے لیے پر تول رہا ہے۔

Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here